چنگ چی رکشوں ، گاڑیوں، منی کارخانوں نے شہریوں کا سانس لینا محال کر دیا

جہلم( چوہدری عابد محمود +سیدمظہر عباس)جہلم شہر میں زہریلا دھوں پھیلانے والے چنگ چی رکشوں ، گاڑیوں، منی کارخانوں نے شہریوں کا سانس لینا محال کر دیا۔منی کارخانوں اور گاڑیوں کے انتہائی خطرناک زہریلے دھوئیں سے شہری دل، جگر ، سانس کی مہلک بیماریوں میں مبتلا ، محکمہ ماحولیات ، میونسپل کمیٹی سمیت ضلعی انتظامیہ خاموش تماشائی ، معمول کی کاروائیاں ڈال کر اعلیٰ افسران کو سب اچھا ہے کی رپورٹیں ارسال کی جانے لگیں ، عوامی ، سماجی اور شہری حلقے سراپا احتجاج، وزیر اعلیٰ پنجاب،سیکرٹری ماحولیات، کمشنر راولپنڈی، ڈپٹی کمشنر جہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ ،تفصیلات کے مطابق جہلم شہر و گردونواح میں انتہائی خطرناک دھواں چھوڑنے والی چھوٹی بڑی گاڑیاں ، جگہ جگہ قائم منی فیکٹریاں ، ٹائر جلانے جانے سے تیزابی دھوئیں نے شہریوں کا سانس لینا محال کر رکھا ہے ، زہریلے دھوئیں کے باعث شہری دل، جگر اور سانس کی خطرناک بیماریوں میں مبتلاہو رہے ہیں ، جبکہ محکمہ ماحولیات میونسپل کمیٹی اور ضلعی انتظامیہ ایک طویل عرصہ سے جاری اس انتہائی خطرناک اور گھمبیر صورتحال کا تدارک کرنے کی بجائے خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہے ہیں اور اعلیٰ احکام کو سب اچھا ہے کی حقائق کے منافی رپورٹیں ارسال کرنے میں مصروف عمل ہیں اس وقت جہلم شہر کی معروف سڑکوں پر فراٹے بھرتی گاڑیوں، چنگ چی رکشوں کے زہریلے دھوئیں اور اندرون شہر مختلف مقامات پر قائم منی کارخانوں کے تیزابی دھوئیں سے شہریوں کی زندگی عذاب بن چکی ہے ۔بھٹہ خشت، گاڑیوں کا شورو دھواں اور غذائی اجناس و فصلوں پر بے شمار کھادوں اور کیڑے مار ادویات کا استعمال بھی ماحولیاتی آلودگی پیدا کرنے والے عوامل میں سرفہرست ہیں ،درختوں کا کٹاؤ، اندرون شہر منی کارخانوں کا فروغ، گندگی کا بے جا پھیلاؤ ماحولیاتی آلودگی کا سبب اور مہلک بیماریوں کی صورت میں پیش کر رہے ہیں۔درختوں کی کٹائی کیوجہ سے چرند پرند کا قدرتی توازن خراب ہورہا ہے۔جس سے معدے جگر، گردوں اور آنتوں کی بیماریوں میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہے ،جہلم کے شہریوں نے متعلقہ اداروں کے افسران سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

x

Check Also

فوک سنگر عمران طالب درد کی مہندی کی تقریب

ٹوبھہ ( ملک ظہیر اعوان)فوک سنگر عمران طالب درد 24فروری2018ہفتہ کی رات کو راجہ شاہ ...

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow