جنگل میں شیر کے جانے سے گیدڑکی بادشاہی ہرگز نہیں ہوسکتی ، عمران خان کا وزیراعظم بننے کا خواب کبھی پورا نہیں ہوگا،میاں محمد عاشق

جہلم (انٹرویو : غلام قادر مخلص )جنگل میں شیر کے جانے سے گیدڑکی بادشاہی ہرگز نہیں ہوسکتی ، عمران خان کا وزیراعظم بننے کا خواب کبھی پورا نہیں ہوگاکیونکہ، شیر دھاڑمارتا ہے جبکہ گیدڑبھبکیاں ،،میاں نوازشریف کے بعد میاں شہبازشریف صدر مسلم لیگ بن گئے اور وزیراعظم بھی بنیں گے ،مخالفین پھر سوچ میں پڑگئے کہ ہم نے حکومت کا خاتمہ چاہا ،باڈی توڑنے کی سازشیں ہوتی رہیں مگر اللہ کے فضل وکرم سے مسلم لیگ ن کی حکومت جہاں تھی وہاں کھڑی ہے ،آسمان کی طرف منہ کرکے تھوکنے سے تھوک اپنے منہ پر ہی گرتا ہے ،ایسا ہی مخالفین کے ساتھ ہواہے ،ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن کے چےئرمین بلدیہ دینہ میاں محمد عاشق نے سنیئرصحافیغلام قادر مخلص اور ان کی ٹیم کو خصوصی انٹرودیتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام میاں نوازشریف کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑے ہیں ،سازشیوں نے پاکستان کی ترقی کے ضامن میاں نوازشریف کی راہ میں روڑے اٹکائے ،، میاں نوازشریف نے عدالتی فیصلہ تسلیم کرکے ثابت کردیا کہ مسلم لیگ ن اداروں کی مضبوطی چاہتی ہے ،جمہوریت کی بحالی کے لیے مسلم لیگ ن کا کردار ناقابل فراموش ہے ،میاں محمد نوازشریف جمہوریت کی علامت ہیں جمہوریت کے استحکام کی خاطر کڑوا گھونٹ پی کرفیصلہ قبول کیا ہے ،میاں نوازشریف آج کروڑوں پاکستانیوں کے دلوں پر حکمرانی کرتے ہیں سازشی عناصر کے ہاتھ کچھ نہیں آئے گا،پاکستان کی ترقی اور استحکام میں میاں نوازشریف کا کردار صف اول کے طور پر شامل ہے ،میاں نوازشریف محب وطن لیڈرہیں ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے چےئرمین بلدیہ دینہ میاں محمد عاشق نے کہا کہ ساری دنیا جانتی ہے مسلم لیگ ن کی حکومت میں پاکستان میں سب سے زیادہ ترقیاتی کام ہوئے ہیں اور ابھی بھی ہو رہے ہیں اور جنہیں دیکھ کر ملک دشمن عناصر کو تکلیف ہو رہی ہے میں چیلنج سے کہتا ہوں کہ عمران خان کبھی بھی پاکستان کا وزیرآعظم نہیں بن سکتاکیونکہ وہ اس قابل ہی نہیں ہے ذوالفقار علی بھٹوکو صرف اس لیئے پھانسی دی گئی کے وہ پاکستان کے لیئے کچھ کرنا چاہتے تھے 1985سے لیکر 1997تک الیکشن ہوئے جس میں میاں نواز شریف اور محترمہ بینظیر بھٹو دو دو مرتبہ وزیراعظم بنیں مگر ان کو ناں تو اختیارات دیئے گئے اور ناں ہی حکومت پوری کرنے دی 1997میں عالمی دنیا کا پریشر ہونے کہ باوجود بھی میاں نواز شریف نے ایٹمی دھماکے کیے اور پاکستان کودنیامیں ایٹمی طاقت منوایا جس کا انعام ان کو اور ان کے خاندان کو یہ ملا کیا ان کو ملک بدر کر دیا گیا او ر یہاں تک کہ ان کو اپنے والد کے جنازے میں شرکت بھی نہیں کرنے دی اوراس وقت کے ڈکٹیٹر نے احتساب کرنے کے دعوئے تو کیے مگر ان پر عمل ناں کیا اور پاکستان کی تمام سیاسی پارٹیوں کا گند اکھٹا کر کہ خود ساختہ حکومت بنا لی اور اس وقت کے وزیراعظم شوکت عزیز نے بھی ان کے ساتھ مل کر پاکستان کو خوب لوٹا اور ملک چھوڑ کر چلے گئے اس وقت کے جو ضلع جہلم کے ناظم تھے چوہدری فرخ الطاف پورے پنجاب میں کرپٹ ناظموں میں آیا تھا فواد چوہدری اوراس کی پوری ٹیم نے چیف جسٹس کی زیرنگرانی پورے پنجاب کو لوٹاجتنے بھی کرپٹ جج جو اس وقت ڈسمس تھے ان کو انہوں نے بحال کروا کر کرپشن کی اس وقت جب تحصیل ناظم کے الیکشن ہوئے تھے تو اس وقت میں بھی تحصیل ناظم کا امیدوار تھا مگر عبدلکریم لنگاہ لگا اس وقت ایڈیشنل سیشن جج اور ریٹرننگ آفیسر تھا وہ اس وقت خود ہمیں اندر بھلا کر کہتا تھا کہ ان کو اندر کرو چوہدری جاوید کو بلا مقابلا تحصیل ناظم دینہ بنانا ہے کرپشن کرنے میں جو کارنامے لدھڑ خاندان کہ ہیں میں کہتا ہوں شائد ہی وہ کسی اورکے ہونگے اور اب وہی کرپٹ لوگ وفاداریاں تبدیل کرکے عمران خان کے ساتھ کھڑے ہوگئے ہیں،ان کی کوئی جماعت نہیں جدھر ان کو پیسے زیادہ ملیں گے یہ لوگ ادھر چلیں جائیں گے ،ان کا ایمان پیسہ ہے ،پیسے کے لیے یہ کچھ بھی کرسکتے ہیں مگر عوام تو جانتے ہیں کے یہ کیا ہیں اور عوام ان سے کیے ہوئے ظلم کا حساب لیں گے یہ کس منہ کے ساتھ عوام کے پاس جائیں گئے انہوں نے کہا کہ پھر آصف زرداری کا دور آیا اور وہ دور بھی گندا ثابت ہوا اور پاکستان کو اندھیروں میں ڈبو دیا گیا پھر مسلم لیگ ن کی حکومت آئی میاں نواز شریف نے ایک بار پھر پاکستان کو ترقی کی راہ پر چلایا اور معیشت کو بہتر کیا اور اب جب پاکستان اندھیروں سے نکل آیا ہے تو ان ملک دشمن عناصر کو تکلیف ہو رہی ہے کہ پاکستان ترقی کی راہ پر کیوں چل رہا ہے اور انشائاللہ میاں نواز شریف ہی 2018 ؁ء میں عوام کے ووٹ کی طاقت سے چوتھی بار وزیراعظم منتخب ہونگے اور سپریم کورٹ جو کہ ایک قابل احترام ادارہ ہے ہم میاں نواز شریف اور شہباز شریف کے سپاہی ہیں اور ان کی خاطر اپنا سب کچھ قربان کر سکتے ہیں کیونکہ وہ پاکستان کی ترقی اور خوشحالی چاہتے اور ہماری آنے والی نسلوں کو ایک ایسا پاکستان دینا چاہتے ہیں جو قائد اعظم چاہتے تھے۔

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow